اوبر ٹیکسی کے اب اوبر انسان بھی کرائے پر

ٹوکیو: (کوہ نور نیوز) اسے ’ہیومن اوبر‘ کا نام دیا گیا ہے جس کے ذریعے آپ کسی دوسرے شخص کو اپنی جگہ تعینات کرسکتے ہیں۔ اسے جاپانی ماہر جون ریکی موتو نے تیار کیا ہے جسے گرگٹ (چمیلیئن) ماسک کا نام دیا گیا ہے اور سنگاپور کی ایک نمائش میں اس کا عملی مظاہرہ کیا گیا ہے۔ انسانی اوبر کے ساتھ ساتھ اسے ’موبائل فیس ٹائم‘ بھی کہا گیا ہے۔ اس کے ذریعے کچھ وقت کے لیے لوگ آپ کے لیے کام کریں گے اور آپ کی نمائندگی کریں گے۔ ریکی موتو نے بتایا کہ کوئی بھی شخص اپنے چہرے پر ایسا ڈسپلے اسکرین لگائے گا جس پر آپ کی شکل دکھائی دے رہی ہوگی اور اس پر آپ کی آواز آرہی ہوگی وہ شخص آپ کی جگہ طویل قطاروں میں کھڑا ہوسکتا ہے یا آپ کا نمائندہ ثابت ہوسکتا ہے۔ علاوہ ازیں آپ کی نمائندگی کرنے والا شخص آپ کی ہدایات کے تحت بھی کام کرسکتا ہے۔ اسکرین ڈسپلے پر آپ لوگوں کو دیکھ سکتے ہیں اور ان سے مل سکتے ہیں یہاں تک کہ آپ گھر بیٹھے ان سے ملاقات کرسکتے ہیں۔ اس طرح آپ دوست کی شادی کی تقریب میں شریک ہوسکتے ہیں جبکہ اوبر انسان اس دوران بالکل خاموش رہے گا اور اپنی شخصیت ظاہر نہیں کرے گا۔ ساتھ ہی آپ اپنے لیے اینی میٹڈ کردار اور ایموجی بھی استعمال کرسکیں گے۔ سوشل ٹیلی پریزنس (سماجی دور موجودگی) کے ذریعے مصروف لوگوں کی بہت سی مشکلات حل ہوسکیں گی۔ ریکی موتو کے مطابق آپ کے اصل قد اور جسامت کی بنا پر اوبر انسان منتخب کرکے اسے آپ کا پسندیدہ لباس بھی پہنایا جاسکتا ہے یا پھر ایسے مرد یا عورت کا انتخاب بھی کیا جاسکتا ہے جسے آپ کی طرح باقی لوگ بھی پہچانتے ہوں۔ اگرچہ پاکستانی معاشرے میں اپنے لیے کرائے کا شخص استعمال کرنا عجیب تصور ہوگا لیکن جاپان اور یورپ میں آئی فون اور شاپنگ سینٹر کی طویل قطاروں پر کوئی آپ کے لیے گھنٹوں انتظار کرسکتا ہے۔ اسی طرح کسی یونیورسٹی میں اپنے دوست کو بھیج کر آپ وہاں کے ضروری کام نمٹا سکتے ہیں۔ اس لحاظ سےیہ ٹیکنالوجی ان گنت کاموں میں استعمال ہوسکتی ہے۔