آئی سی سی نے ایشز سیریز کو فکسنگ سے پاک قرار دے دیا

دبئی: (کوہ نور نیوز) دسمبر 2017 میں برطانوی اخبار ’’دی سن‘‘ نے الزام عائد کیا تھا کہ اس کے رپورٹرز نے روپ بدل کر اسٹنگ آپریشن کرتے ہوئے بھارتی بکیز سے رابطے کیے تو انھوں نے یقین دلایا کہ رقم دی جائے تو ایشز سیریز میچ کے کچھ حصے فکسڈ کرسکتے ہیں۔ بکیز نے انٹرنیشنل کرکٹرز کے ساتھ رابطے اور ٹی ٹوئنٹی لیگزپر اثرانداز ہونے کا دعویٰ بھی کیا جب کہ اس اسکینڈل پر دنیائے کرکٹ میں طوفان برپا ہوا اور آئی سی سی نے معاملے کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے تحقیقات شروع کردیں۔ جنرل منیجر اینٹی کرپشن الیکس مارشل نے کہا کہ ہم نے دنیا کے مختلف ملکوں میں کام کرنے والے اے سی یو عہدیداروں کی مدد سے الزامات کے حوالے سے چھان بین کی لیکن کوئی چیز سامنے نہیں آئی،میں مطمئن ہوں کہ ایشز میچ کسی موقع پر بھی کوئی کرپشن نہیں ہوئی،نہ ہی کوئی ایسے شواہد ملے کہ کسی انٹرنیشنل کرکٹر، کوچ یا منتظم کا کسی بکی سے کوئی رابطہ تھا۔