نامور موسیقار روبن گھوش کی آج دوسری برسی ہے

لاہور(کوہ نور نیوز) لالی ووڈ کے نامور موسیقار روبن گھوش کی آج دوسری برسی منائی جا رہی ہے۔ روبن گھوش کا تعلق بنیادی طور پر بنگلہ دیش سے تھا۔ وہ 13 ستمبر 1939 کو عراق میں پیدا ہوئے، ان کے ایک بھائی اشوک گھوش پیشے کے اعتبار سے فلم ڈائریکٹر تھے ۔ دوسری جنگ عظیم کا آغاز ہوا تو روبن گھوش اپنے اہلخانہ کے ہمراہ عراق سے ہجرت کر کے ڈھاکہ منتقل ہوگئے۔ زمانہ طالبعلمی سے ہی موسیقی سے لگائو ہونے کی وجہ سے انہوں نے ہارمونیم خرید کر اس پر موسیقی کی تربیت حاصل کرنا شروع کی۔ بعد ازاں ڈھاکہ سے ہی انہوں ںے موسیقی کے شعبے میں گریجوایشن کی اور باقاعدہ موسیقی سے وابستہ ہوگئے 1950 میں روبن گھوش اپنے دوست کے ساتھ ریڈیو سٹیشن گئے جہاں ان کی ملاقات شبنم سے ہوئی جو بعد میں محبت میں بدل گئی اور دونوں نے شادی کر لی۔ 1960 میں فلم ڈائریکٹر احتشام ریڈیو سٹیشن آئے اور انہوں نے روبن گھوش کو اپنی فلم راج دنیر بھوکے کی موسیقی ترتیب دینے کی پیشکش کی ۔ اس کے بعد انہوں نے کئی بنگالی اور اردو فلموں کی موسیقی ترتیب دی جن میں تلاش ، پیسہ ، چکوری اور بھیا جیسی کامیاب فلمیں شامل تھیں۔ ان فلموں کی ریلیز کے بعد روبن گھوش کراچی منتقل ہوگئے اور پاکستانی فلموں کی موسیقی ترتیب دینا شروع کر دی۔ ان کے کیریئر کی یادگار فلموں میں سے ایک آئینہ تھی جس نے انہیں راتوں رات شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا۔ روبن گھوش کی فلم چاہت کو بھی شائقین کی جانب سے بے حد پذیرائی حاصل ہوئی ۔ شبنم اور رحمان جیسے اداکاروں پر مشتمل اس فلم کا گیت ساون آئے ساون جائے اس دور کا سپرہٹ گیت قرار پایا ۔ اسی طرح اداکار ندیم کی فلم چکوری کا گیت کہاں ہو تم کو ڈھونڈ رہی ہیں یہ بہاریں یہ سماں بھی سپرہٹ رہا ۔