آٹھ ماہ میں تجارتی خسارہ 24 ارب 27 کروڑ ڈالر تک پہنچ گیا، ادارہ شماریات

کراچی: (کوہ نور نیوز) اشیاء پر ریگیولیٹری ڈیوٹی کے نفاذ اور ٹیکسوں میں اضافے کے باوجود ملکی درآمدات میں اضافے کا رجحان جاری ہے، جبکہ ایکسپورٹ پیکیج دیے جانے کے باوجود ملکی برآمدات میں بھی خاطر خواہ اضافہ نہیں ہورہا۔ ادارہ شماریات کے مطابق جولائی سے فروری کے دوران تجارتی خسارہ 20 فیصد اضافے سے 24 ارب 27 کروڑ ڈالر رہا ہے۔ آٹھ ماہ میں ملکی برآمدات 11 فیصد اضافے سے 14 ارب 85 کروڑ ڈالر جبکہ درآمدات 17 فیصد اضافے سے 39 ارب 13 کروڑ ڈالر رہی۔ ماہرین کے مطابق بڑھتے ہوئے تجارتی خسارے کے باعث ادائیگیوں کا توازن مسلسل بگڑ رہا ہے۔ اگر یہی حالات برقرار رہے تو مستقبل قریب میں پاکستان کو ایک بار پھر عالمی مالیاتی اداروں سے قرض لینا پڑے گا۔